jump to navigation

کیڑے December 23, 2011

Posted by Farzana Naina in Poetry.
trackback

فیس بک کے غنڈہ گروپ کو وقفے وقفے کے بعد کیڑے کاٹنے لگتے ہیں، ان کو اور کچھ نہیں سوجھتا تو کتوں کی طرح بھونکنا شروع کر دیتے ہیں۔

چاہے کو یٗ توجہ دے یا نہ دے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

اور شاید یہی ان کا مسٗلہ ہے کہ انہیں ہر پل توجہ کی بھوک مٹانے کے لیئے مروڑ اٹھتے رہتے ہیں۔

ادبی دنیا میں چھوٹی بڑی سطح پر جو بھی قابل احترام ہستی کام کر رہی ہے اس کی پذیرایٗ کرنا ایک اچھے انسان و بلند پایہ ادیب یا شاعر ہونے کا ثبوت ہے مگر یہ ٹولا بہ مجبوری ایسا یوں نہیں کر سکتا کہ انہیں اپنی خنس نکالتے ہویٗے دیگر لکھنے والے ادبی کیڑے مکوڑے لگتے ہیں۔

سنجیدہ اور اچھے گھرانوں کے لوگ رفتہ رفتہ ان سے کنارہ کشی اختیار کر چکے ہیں اور کویٗ اگر بہت ہی مجبور ہو تو خامشی کا تالا لگا کر بیٹھ جاتا ہے۔

اس کے سوا چارہ بھی کیا!۔

کتوں کے غول کو جو بھی چھیڑے گا وہ بقیہ کتوں سمیت اسی کی جانب پل پڑے گا نا !!!۔

ادب کے ان غنڈوں کا اکھاڑہ بنانے والا  کام عرصے سے جاری ہے، غلاظت بھری باتوں سے لطف اندوز ہونے والے ادبی غنڈوں کی چاندی یوں بھی ہوگئی ہے کہ اب با آسانی فیس بک کے ذریعے سے وہ تمام دنیا تک رسایٗ حاصل کر کے اپنے مادر پدر آزاد ہونے کا اعلان فخریہ کر سکتے ہیں،

کویٗ طواٗیف کے قتل میں ملوث ہو کر ملک چھوڑ کر بھاگا ہوا ہے تو کویٗ غبن کے الزام سے بچنے کے لیٗے اسایٗلم سیکر بنا بیٹھا ہے۔

کویٗ اپنی دانست میں وقت کا عظیم شاعر، فلسفی اور ادب کا ایسا ٹھیکیدار ہے جس کی توانایٗ تعمیری و تنقیدی کام کے بجایٗے دوسروں کی ذاتی زندگیوں کے خفتہ خانوں کی چھان بین ہے۔

اب چونکہ رنڈی خانوں اور شراب خانوں کے مزے اپنے وطن جیسے نہیں لگتے ہیں تو یہ بھی کیا کریں، شاعرات کی ہی دھجیاں اڑایٗ جایٗں،

یہ انسان اپنی بیویوں بہنوں اور بیٹیوں کی شکل یا کویٗ فوٹو تو دنیا کو کبھی نہیں دکھاتے مگر دوسروں کی ماوٗں بہنوں کی تصاویر کو دیکھ دیکھ کر ان کی رال ٹپکتی ہے اور ذہن جنسی تلذذ سے بھر جاتے ہیں، یہ بے دریغ اپنے ہم خیال و ہم مزاج غلیظ دوست یاروں کا مجمع لگا کر محفلیں سجا کر اجتماعی بڑکیں مارتے ہیں اور اسی سے مسرت حاصل کرتے ہیں

مزے کی بات یہ ہے کہ ان کے گواہ وہ لوگ ہیں جن کی ان خواتین سے کبھی ملاقات تک نہیں ہوئی جن کے لیٗے وہ چشم دید گواہ بنے رہتے ہیں، کچھ تو یونہی اپنی ہوس بھری تسکین کے لیٗے اور کچھ ان کی بلیک میلنگ میں آکر اپنی اپنی قبروں اور آخرت کا کالا منہ کرنے میں ہمہ وقت مصروف ہیں۔

اللہ پاک انہیں ہدایت دے اور اس قوم پر رحم فرمایٗے ۔۔۔ آمین۔

Comments»

No comments yet — be the first.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: